European country that openly supported Israeli atrocities on Palestine

ویانا(ویب ڈیسک)آسٹرین حکومت نے اسرائیل کی حمایت کا اعلان اور اسرائیل کا پرچم وزارت خارجہ کی عمارت پر لہرادیا گیا۔ اسرائیل اور فلسطین کے مابین جنگ کا خطرہ بڑھتا جا رہا ہے لہذا آسٹریا کی حکومت نے اسرائیل کی حمایت کا واضح اشارہ دے دیاہے۔ مشرق وسطیٰ کے تنازعہ میں آسٹرین وزیراعظم سیبسٹین کرز کا موقف کوئی راز نہیں ہے ،ان کے اسرائیلی صدر بینجمن نیتن یاہو کے ساتھ بہت اچھے تعلقات ہیں ۔

آسٹرین وزیراعظم سبسٹین کرز نے کہاہے کہ میں غزہ کی پٹی سے اسرائیل پر حملوں کی مذمت کرتا ہوں ، اسرائیل کو ان حملوں کے خلاف اپنا دفاع کرنے کا حق ہے۔ ہم نے اسرائیلی پرچم اسرائیل کے ساتھ یکجہتی کے طور پر لہرایا ہے۔ وزیر خارجہ الیگزنڈر شیچلنبرگ نے وضاحت کی ہے کہ حماس اور دیگر گروہوں نے اب تک اسرائیل پر جو ہزار راکٹ فائر کیے ہیں اس کا کوئی جواز نہیں ہے،ہم اسرائیل کی سلامتی کے پیچھے مضبوطی سے کھڑے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ میں یہودیوں پر حملوں کی اطلاعات سے شدید حیرت زدہ ہوں، حملوں کا کسی بھی طرح سے جواز پیش نہیں کیا جاسکتا۔ آسٹریا اسرائیل کی مکمل حمایت کرتا ہے اور اسرائیل کا پرچم اس کی نشانی کے طور پر ہمارے گھر پر لہرا رہا ہے۔ آسٹریا میں اسرائیل کے سفارت خانے کی سیکیورٹی سخت کردی گئی ہے اور سفارت خانے آنے والے تمام راستوں کو رکاوٹیں لگا کر بند کر دیا گیا ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.