آج سے میری پوری کوشش ہوگی نوازشریف کو واپس لایا جائے، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ نواز شریف گیڈر کی طرح دم دبا کر ملک سے بھاگا ہے، آج سے میری پوری کوشش ہو گی کہ اسے واپس لایا جائے۔

اسلام آباد میں ٹائگر فورس پورٹل کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ یہ وہ نوازشریف ہے جو آج فوج کے خلا ف غلط زبان استعمال کررہا ہے۔ نوازشریف نے باہر بیٹھ کر پاکستانی فوج پر حملہ کیا۔

عمران خان نے کہا کہ بھارت کے اخباروں میں نوازشریف کی تعریف ہو رہی ہے۔ کیا بھارت کو نہیں پتہ جنرل ضیا نے گو د میں بٹھا کر نوازشریف کے منہ میں چوسنی لگائی تھی۔

وزیراعظم نے کہا کہ نوازشریف نے ڈنڈوں سے سپریم کورٹ پر حملہ کرایا تھا۔ پاناما کے کیس میں نوازشریف کو نکالا گیا تو یہ کہتا ہے کیوں نکالا۔ نوازشریف، شہبازشریف ان کے بچے سب جھوٹ بولتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی تقریر سن کر ایک نیا عمران خان بن گیا ہے۔ اب سے ان کو کوئی وی آئی پی جیل نہیں ملے گی، عام قیدیوں کی طرح رکھیں گے۔ انشااللہ اب آپ کو میں مقابلہ کرکے دکھاوَں گا۔ میرے نیچے جو ادارے ہیں ان کو تیار کروں گا، جو پیسہ لوٹ کر باہر لے کر گئے ان کو پکڑوں گا۔

وزیراعظم نے کہا کہ نوازشریف اداروں میں انتشار پھیلانے کی کوشش کررہا ہے۔ یہ اسرائیل اور بھارت کی لابی کو اپیل کررہا ہے۔ نوازشریف جو گیم کھیلنے کی کوشش کررہا ہے میں اس ساری گیم کو جانتا ہوں۔

 

انہوں نے کہا کہ مجھے کسی چیز کا خوف نہیں میری کوئی جائیداد باہر نہیں، میں نے کوئی پیسہ نہیں لوٹا۔ پاک فوج نے کراچی کی بارشوں اور عالمی وبا کورونا کے دوران ہماری مکمل مدد کی۔ دو سال پاکستان کی فوج نے اپنی دفاعی فنڈ میں کٹ لگایا۔ فارن پالیسی میں فوج ہمارے ساتھ کھڑی رہی ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ یہ اداروں اورحکومت کے درمیان انتشار پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ آج سے میری پوری کوشش ہے کہ نوازشریف کو ملک واپس لایا جائے۔ نوازشریف تم واپس آوَ میں تمہیں دیکھتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ لندن جانے سے پہلے نوازشریف کی تصویر دیکھ شیریں مزاری کی آنکھوں میں آنسو آ گئے تھے، شیریں مزاری کی آنکھوں میں آنسو آنا بہت مشکل ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہولی ووڈ بھی ایسی ایکٹنگ نہیں کرسکتا جیسی ایکٹنگ شہباز شریف کرتا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ ہمارے فوجیوں پر مسلسل حملے ہورہے ہیں، ہمارے فوجی اپنی جان کی قربانیاں دے رہے ہیں۔ 2 دن پہلے20 لوگوں نے پاکستان کی خاطر اپنی جان کی قربانی دی۔

انہوں نے کہا کہ حدیبہ پیپر ملز کا کیس آصف زرداری نے نوازشریف پر بنا یا تھا۔ نوازشریف پرایک صحافی کی کتاب بھی آئی تھی۔ کتاب میں لکھا گیا تھا کہ کیسے انہوں نے ملک سے پیسہ باہر بھیجا تھا۔

عمران خان نے کہا کہ بینظیر بھٹو نے بلاول کو فون کرکے بینکوں کا بتایا کہ کہاں کہاں پیسہ پڑا ہوا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ 2018 میں ن لیگ کی پنجاب میں 11 اور پی ٹی آئی کی 13 پٹیشنز تھیں۔ فافن نے کہا 80 فیصد الیکشن 2013 کے الیکشن سے بہتر ہوا۔جب 4 حلقے کھولے گئے تو چاروں حلقوں میں دھاندلی تھی۔ ہم نے ان سے کہا جو حلقہ کہیں گے کھولے گے۔ 250کروڑ روپے مسلم لیگ ن حلقہ جیتنے کے لیےخرچ کیا۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سیالکوٹ کا رنگ باز بڑی بڑی باتیں کرتا ہے۔ رنگ باز خواجہ آصف نے 8 بجے فون کر کے کہا کہ میں الیکشن ہا ر رہا ہوں، میری مدد کریں۔

وزیراعظم نے کہا کہ ابھی تک اپوزیشن نے ایک عمران خان دیکھا ہے۔ یہ جو اب عمران خان دیکھیں گے وہ بہت مختلف ہوگا۔ اب کسی کو پروڈکشن آرڈر نہیں ملے گا۔ جب تک یہ عدالتوں میں جواب نہیں دیگا اس کو کسی قسم کا پرڈکشن آرڈر نہیں ملے گا۔

عمران خان نے کہا کہ لوگ چاہتے ہیں کہ ان چوروں سے پیسہ عوام کے پاس آئے۔ چیف جسٹس سے کہوں گا ہر طرف کی سپورٹ دینے کو تیار ہیں۔خدا کا واسطہ ہے کیسز کو منطقی انجام تک تو پہنچائیں۔ قوم انتظا کررہی ہے کب ان کو لوٹا ہوا پیسہ ملے گا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...