دنیا کا تیز ترین انٹرنیٹ، ایک چھوٹے سے ملک میں

شمالی یورپ میں بحیرہ بالٹک اور فن لینڈ کی خلیج کے کنارے پر واقع چھوٹا سا ملک ایسٹونیا دنیا میں تیز ترین انٹرنیٹ کے حوالے سے جانا جاتا ہے۔
 ایسٹونیا میں نہ صرف تیز ترین انٹرنیٹ ہے بلکہ پورے ملک میں وائی فائی کی سہولت موجود ہے اور یہاں کا لگ بھگ سارا نظام ہی انٹرنیٹ سے منسلک ہے۔
ایسٹونیا کا رقبہ 45 ہزار 227 مربع کلومیٹر اور اس کی آبادی 13 لاکھ 24 ہزار نفوس پر مشتمل ہے۔
اس یورپی ملک نے 1991 میں سوویت یونین سے آزادی حاصل کی تھی اور صرف 28 سال کے عرصے میں اس کے لوگوں نے اپنی محنت اور ذہانت سے پوری دنیا میں اپنا لوہا منوالیا۔
ایک ریسرچ کے مطابق ایسٹونیا میں اتنی کمپنیاں ہیں جتنی امریکی ریاست کیلی فورنیا کی سلی کان ویلی میں بھی نہیں ہیں۔
یہاں الگ الگ شعبہ جات میں 600 آن لائن سروسز موجود ہیں۔
ایسٹونیا میں 1997 میں ای گورننس کا سسٹم نافذ کیا گیا جس کے بعد سنہ 2000ء میں یہاں ٹیکس وصولی کو آن لائن کردیا گیا۔
یہاں 2002 میں ڈیجیٹل آئی ڈی، 2005 میں الیکٹرانک ووٹنگ، 2008 میں ای ہیلتھ اور 2014 میں ای ریزیڈنسی کا سسٹم متعارف کرایا گیا ۔
ایک رپورٹ کے مطابق ایسٹونیا میں ہونے والے آخری الیکشن میں مجموعی ووٹنگ کا 44 فیصد حصہ آن لائن کاسٹ ہوا۔
ایسٹونیا کے تمام شہریوں کی صحت کا ریکارڈ آن لائن ہے جبکہ یہاں انکم ٹیکس کی ادائیگی میں چند منٹ ہی لگتے ہیں اور اگر آپ یہاں کوئی کمپنی رجسٹرڈ کرانا چاہتے ہیں تو اس عمل میں صرف 18 منٹ لگیں گے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں