ایک لاکھ 36 ہزار سال پہلے ناپید ہوجانے والا پرندہ دنیا میں واپس آگیا، ہر کوئی حیران رہ گیا

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) بحر ہند کے ایک جزیرے پر 1لاکھ 36ہزار سال قبل ناپید ہو جانے والا پرندہ دوبارہ واپس آ گیا جس پر ماہرین بھی ششدر رہ گئے۔ میل آن لائن کے مطابق بحر ہند میں واقع جزیرے ایلڈیبرا سے اس پرندے کی باقیات دریافت ہوئی تھیں جن سے معلوم ہوا تھا کہ اس جزیرے پر یہ پرندہ ایک لاکھ 36ہزار سال قبل رہتا تھا اور پھر آخری برفانی دور سے پہلے گلوبل وارمنگ ہوئی اور سمندر کی سطح بلند ہونے سے یہ جزیرہ زیرآب آ گیااوراس پرندے کی نسل ختم ہو گئی۔

آخری برفانی دور میں جب سمندر کی سطح ایک بار پھر نیچے جانی شروع ہوئی تو یہ جزیرہ نمودار ہونا شروع ہو گیا اور اس کے ساتھ ہی یہ پرندہ بھی واپس آ گیا۔ اس پرندے کے دوبارہ دنیا میں آنے کو سائنسدان ارتقائی عمل کا معجزاتی مظاہرہ قرار دے رہے ہیں۔ اس پرندے کا نام ’ریل‘ ہے۔ اس پر تحقیق کرنے والے یونیورسٹی آف پورٹس ماﺅتھ اور لندن کے نیچرل ہسٹری میوزیم کے ماہرین کا کہنا ہے کہ ”گلوبل وارمنگ کے باعث جزیرے کے سمندر میں ڈوب جانا ثابت ہو چکا ہے۔ اس کے ساتھ اس پر موجود زندگی بھی ختم ہو گئی تھی۔ یہ پرندہ اڑنے کی صلاحیت نہیں رکھتا تھا چنانچہ جزیرے کے ساتھ ہی اس کی نسل بھی ناپید ہو گئی۔ یہ پرندہ صرف اسی جزیرے پر نہیں بلکہ ایک مڈغاسکن جزیرے پر بھی موجود تھا اور اسی آخری برفانی دور سے قبل ناپید ہو گیا۔ وہاں بھی اس کی نسل دوبارہ پیدا ہو چکی ہے۔ “

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں