سعودی عرب میں تیل پائپ لائن پر دہشت گردوں کا فضائی حملہ

ریاض (ویب ڈیسک) سعودی عرب میں تیل پائپ لائن پر دہشت گردوں نے حملہ کیا ہے۔ یہ حملہ ڈرون کے ذریعے سے کیا گیا،واشنگٹن پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب کے وزیر برائے توانائی خالد الفلیح کا کہنا ہے کہ سعودی عرب میں تیل پائپ لائن پر دہشت گردوں نے ڈرون حملہ کیا ہے۔ایسٹ ویسٹ پائپ لائن کے دو پمپنگ سٹیشنز کو ڈرون سے نشانہ بنایا گیا

دہشت گردوں نے ڈرون کے ساتھ دھماکہ خیز مواد باندھ رکھا تھا۔تیل کی تنصیبات پر حملوں کے لیے ڈرون میں دھماکہ خیز مواد استعمال کیا گیا۔واضح رہے گذشتہ ہفتے سعودی عرب کے مشرقی خطے قطیف میں گزشتہ روز پولیس چھاپے میں ’’ایک دہشت گرد‘‘سمیت آٹھ افراد ہلاک کیے گئے تھے، حال ہی میں قائم ہونیوالا سیل ملکی سکیورٹی کے خلاف ’’دہشت گرد‘‘ کارروائیوں کی تیاریاں کررہا تھا ، یہ رپورٹ سرکاری خبررساں ایجنسی سعودی پریس ایجنسی نے سرکاری سکیورٹی ادارے کے ترجمان کے حوالے سے دی ہے ۔

انہوں نے بتایا کہ ان افراد کواس وقت مارا گیا جب انہوں نے سکیورٹی فورسز پر گولیاں برسائیں جنہوں نے سنابس کے علاقے میں موجود رہائشی عمارت کا محاصرہ کیا تھا ۔ ترجمان نے بتایا کہ انہیں ہتھیار ڈالنے کا کہا تھا لیکن انہوں نے جواب نہیں دیا اور سکیورٹی فورسز پر فائرنگ شروع کردی جس کے نتیجے میں ان کو ماردیا گیا ۔ انہوں نے مزیدبتایا کہ آپریشن میں کوئی شہری یا سکیورٹی اہلکار زخمی نہیں ہوا ہے ، سعودی عرب کا مشرقی صوبہ جس میں قطیف شامل ہے ، میں 2011ء کے بعد سے بے چینی کے مظاہرے دیکھے جارہے ہیں جب مظاہرین عرب دیہات کے مظاہروں سے متاثر ہو کر سڑکوں پر نکلے تھے ۔
مظاہرین نے ’’سنی اکثریتی حکومت کی جانب سے امتیازی سلوک‘‘ کے خاتمے کا مطالبہ کیا تھا یہ ایک ایسا الزام ہے جسے ریاض مسترد کرتا ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں