اسرائیلی خفیہ ادارے نے واٹس ایپ کو ہیک کر کے صارفین کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کر لی ، واٹس ایپ انتظامیہ نے صارفین کے لیے ہنگامی ہدایت نامہ جاری کر دیا

واشنگٹن(ویب ڈیسک) اسرائیلی خفیہ ادارے نے مبینہ طور پر ایک کمپنی کی معاونت سے وٹس ایپ کو جاسوسی کرنے والے وائرس کے ذریعے ہیک کر کے صارفین کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کرنا شروع کر دی۔تفصیلات کے مطابق واٹس ایپ پر صرف ایک مس کال آتی ہے اور جاسوسی کا ایک جدید وائرس کا حامل سافٹ وئیر صارف کے فون میں انسٹال ہو جاتا ہے۔ صارفین کی جاسوسی کا یہ سافٹ ویئر مبینہ طور پر اسرائیلی خفیہ ادارے نے تیار کیا ہے اور یہ صارف کے کیمرے اور مائکروفون تک رسائی حاصل کر لیتا ہے۔

وٹس ایپ انتظامیہ نے اپنے صارفین کو تلقین کی ہے کہ تمام صارفین ایپ کو اپ ڈیٹ کرلیں ورنہ جاسوسی کرنے والی کمپنی صارفین کے مائکرو فون اور کیمرے کے ذرایعے ان کی ذاتی معلومات حاصل کر سکتی ہے۔

کمپنی نے وٹس ایپ کی نئی اپ ڈیٹ بھی نشر کر دی ہے جسے پلے سٹور سے ڈاؤنلوڈ کیا جا سکتا ہے۔انتظامیہ کے مطابق ایپ میں موجود ایک چھوٹی سی کامی کو استعمال کر کے جاسوسی ادارے نے ایک ایسا سافٹ وئیر تیار کیا ہے کہ صارف کے فون پر ایک مس کال آتی ہے اور صارف کا وٹس ایپ ہیک ہو جاتا ہے اور ابھی تک درجنوں افراد کے وٹس ایپ میسنجرز ہیک کیے جا چکے ہیں۔

واٹس ایپ کمپنی کے ترجمان نے اسرائیل کا نام لیے بغیر کہا ہے کہ ’اس سپائی ویئر کوحکومت کے ساتھ کام کرنے والی ایک نجی کمپنی نے تیار کیا ہے۔ وٹس ایپ کمپنی کے ترجمان نے مزید بتایا کہ’ایپ کی ایک معمولی سی کامی سے فائدہ اٹھا کر ایپ میں ایک بلاواسطہ طور پر ایک وائرس بھیجا جاتا ہے جس سے نشانہ بنائے جانے والے نمبر کے فون میں ایک سافٹ وئیر انسٹال ہو جاتا ہے ‘۔ ترجمان نے کہا کہ تمام صارفین اپنی ایپ کو اپ ڈیٹ کرلیں تاکہ ان کا ڈیٹا محفوظ رہے۔ یاد رہے کہ فیس بک کی ذیلی کمپنی واٹس ایپ کے دنیا بھر میں ڈیڑھ ارب سے زیادہ صارفین وٹس ایپ استعمال کر رہے ہیں اور اب ان کا ڈیٹا خطرے میں پڑ گیا ہے تاہم انتظامیہ نے کسی بھی نقصان سے بچنے کے لیے صارفین کو ایپ اب ڈیٹ کرنے کو کہا ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں