عالمی برادری کو غیرقانونی اثاثوں کے خلاف یکجا ہوکر کام کرنا چاہیے: ملیحہ لودھی

اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کا کہنا ہے کہ ترقی پذیر ممالک کے اثاثوں کی غیر قانونی منتقلی سے شدید نقصان پہنچتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ملیحہ لودھی نے اقوام متحدہ میں اثاثہ جات کی غیر قانونی منتقلی پر اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری کو غیرقانونی اثاثوں کے خلاف یکجا ہوکر کام کرنا چاہیے۔

پاکستانی سفیر نے کہا کہ ترقی پذیر ممالک کے اثاثوں کی غیر قانونی منتقلی سے شدید نقصان پہنچتا ہے، تکنیکی مسائل ترقی پذیر ممالک کے لیے اثاثوں کی واپسی مشکل بنا دیتے ہیں۔

پاکستانی مندوب ملیحہ لودھی نے کہا کہ اثاثوں کی غیر قانونی منتقلی روک کر وسائل عوام کی فلاح پراستعمال ہوسکتے ہیں۔

یاد رہے کہ دو روز قبل چین کے شہر گوانگ زو میں ہونے والے مذاکرات میں پاکستان کے وفد کی قیادت سیکرٹری خزانہ یونس ڈھاگہ نے کی تھی۔

پاکستانی وفد میں وزارت داخلہ، ایف آئی اے، وزارت خارجہ، سیکیورٹی اینڈ ایکسچینج کمیشن، نیکٹا اور اسٹیٹ بینک آف پاکستان سمیت دیگر اداروں کے اعلیٰ حکام شریک تھے۔

پاکستان کے ساتھ مذاکرات میں امریکا، چین، آسٹریلیا، برطانیہ، فرانس، جرمنی، ترکی، ملائیشیا اور بھارت کے نمائندے شامل تھے۔

پاکستانی وفد نے ایشیا پیسیفک گروپ کو بریفنگ کے دوران بتایا کہ کرنسی اسمگلنگ روکنے کے لیے تمام خارجی راستوں پر موثر نظام نصب کردیا گیا ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں