امریکا سے ممکنہ جنگ، ایران کے بڑے اتحادی ملک نے ساتھ دینے سے انکار کردیا

بغداد(این این آئی) عراق میں الصدری گروپ کے سربراہ مقتدی الصدر نے کہاہے کہ وہ ایران اور امریکا کے درمیان جنگ کے حق میں نہیں اور یہ نہیں چاہتے کہ عراق کو اس جنگ میں جھونک کر اسے لڑائی کا میدان بنا دیا جائے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اپنی ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ ہمیں قوم کے بڑوں کی جانب سے ایک سنجیدہ موقف کی ضرورت ہے تا کہ عراق کو اس گھمسان کی لڑائی سے دٴْور رکھا جا سکے جو ہر خشک و تر کو نگل لے گی۔

الصدر کے مطابق اس بات کی ضرورت ہے کہ عراقی عوام اس جنگ کی مذمت کریں اور جنگ میں عراق کو جھونکنے کے خلاف آواز اٹھائیں۔ انہوں نے زور دیا کہ اگر عراق نے ایک سنجیدہ موقف نہ اپنایا تو پھر یہ جنگ عراق کا خاتمہ ثابت ہو گی۔الصدر نے اپنی ٹویٹ کا اختتام یہ کہتے ہوئے کیا کہ کسی بھی فریق نے عراق کو جنگ میں گھسیٹتے ہوئے اسے لڑائی کا میدان بنایا تو وہ عراقی عوام کا دشمن ہو گا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں