اگر کل ڈالر ڈیڑھ سو پر چلا گیا تو سٹاک مارکیٹ ۔۔۔ سینئر تجزیہ کار ارشاد بھٹی نے لائیو پروگرام میں ایسی بات کہہ دی کہ یقین کرنا بھی مشکل ہو جائے گا

لاہور (ویب ڈیسک) تجزیہ کار ارشاد بھٹی نے کہا ہے کہ ایک دن کی پریس کانفرنس، ایک دن ڈالر کم ہونے یا سٹاک مارکیٹ کے ایک دن چڑھنے سے حالات ٹھیک نہیں ہونگے ۔پروگرام ہار ڈ ٹاک پاکستان میں اینکر پرسن ڈاکٹر معید پیرزادہ سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا فرض کریں

اگر کل ڈالر ڈیڑھ سو پر چلا جاتا ہے تو سٹاک مارکیٹ میں پھر مسئلہ شروع ہوجائیگا۔اس میں کوئی شک نہیں کہ شبر زیدی کے آنے سے بہتری ہوئی ہے ۔تاجر برادری میں اعتماد کی فضا بحال ہوئی ۔خوف کا ماحول ختم ہوا ۔ یہ ایک پازٹیو تبدیلی ہے ۔ ہمارے پاس بجلی ہوبھی تو وہ ضائع ہوگی کیونکہ چوری ہوجائے گی۔ عمر ایوب کو بجلی چوری رونے کیلئے فوکس کرنا چاہئے ۔تجزیہ کار فہد حسین نے کہا پہلے تو یہ دیکھنا ہے آپ کی معیشت کیسے پرفارم کررہی ہے ۔آپ اسے بہتر کرنے کیلئے کام کیا کررہے ہیں ۔

دوسرا یہ ہے کہ جو کام آپ بہتری کیلئے کررہے ہیں اسے کمیونیکیٹ کیسے کررہے ہیں ۔حکومت نے جو پریس کانفرنس کی ہے وہ صرف ایک پیغام دینے کیلئے تھی ۔گورنمنٹ چاہتی ہے وہ اپنے بیانیے پر چلے کیونکہ جو اس کا بیانیہ تھا وہ اس سے پیچھے رہ گئی ہے ۔پریس کانفرنس میں حفیظ شیخ نے بڑے آسان الفاظ میں ، آسان طریقے سے ایک لے مین کیلئے اکانومی کا ایک براڈ ایجنڈا پیش کردیا ہے ۔اس کے بعد جتنی ٹیم بھی پریس کانفرنس میں بیٹھی تھی انہوں نے ستیا ناس کردیا۔تجزیہ کار کاشف عباسی نے کہا ایک پریس کانفرنس سے تو مسئلہ حل نہیں ہوگا۔ جن لوگوں نے پریس کانفرنس کی ان میں تحریک انصاف کا صرف ایک ممبر شامل تھا ۔اصل بات تو یہ ہے حکومت نے بزنس مین اور سرمایہ کار کا اعتماد بحال کرنا ہے ۔ حفیظ شیخ نے روڈ میپ دیا ہے مگر مارکیٹ اس پر کیسے رسپانس کرتی ہے یہ دیکھنا پڑے گا۔معیشت کے حوالے سے حکومت کو بار بار لوگوں کو بتانا پڑے گا کہ اب سرمایہ کاروں کو پریشانی نہیں ہوگی۔ تاجر برادری کو نیب بھی نہیں بلائے گی ۔ اب کوشش ہورہی ہے معیشت ٹھیک ہو مگر اس میں وقت لگے گا۔ ملک کی سٹاک مارکیٹ میں جو بھونچال آیا ہوا تھا وہ اب کچھ کم ہوا ہے ۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں