فضائی حدود کے استعمال کی اجازت ملنے کے بعد مودی نے پینترا بدل لیا بھارتی وزیر اعظم کا جہاز اب پاکستان کے کس شہر سے گزرے گا؟

نئی دہلی (ویب ڈیسک) : بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے پاکستانی فضائی حدود استعمال کرنے کی درخواست سے متعلق اہم خبر سامنے آ ئی ہے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ بھارت نے اجازت ملنے کے باوجود بھی پاکستانی فضائی حدود استعمال نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پاکستان سے اجازت ملنے کے بعد مودی نے پینترا بدل کیا۔مودی کا طیارہ اب اومان،ایران اور مشرق وسطی کے ممالک سے گزر کر بشکیک جائے گا،تاہم ذرائع دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ بھارت اعلان کے باوجود پاکستانی فضائی حدود استعمال کرے گا۔

مودی کا جہاز کراچی کی فضائی حدود سے ہوتا ہوا اگلی منزل پر جائے گا۔ذرائع دفتر خارجہ کا مزید کہنا ہے کہ پاکستان نے بھارت کے دو روٹس کھولے ہیں۔مودی کے جہاز کو تھوڑی دیر کے لیے پاکستانی حدود سے گزرنا ہی پڑے گا۔

مودی کا جہاز کراچی،ہنگول سے ایران، عمان براستہ گوادر فضائی حدود استعمال کرے گا۔خیال رہے پاکستان نے بھارتی وزیراعظمنریندر مودی کے طیارے کو پاکستان کی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت دے دی۔

بھارتی وزیراعظم نریندر مودی 13 اور 14 جون کو کرغیزستان میں ہونے والی شنگھائی تعاون تنظیم (ایس سی او) کے سربراہی اجلاس میں شرکت کے لیے بشکیک جائیں گے۔ یاد رہے کہ پاکستان اور بھارت کے مابین کشیدہ تعلقات کی وجہ سے پاکستان نے اپنی فضائی حدود بھارت کے لیے بند کر دی تھیں جس کے بعد بھارت نے پاکستان سے درخواست کی تھی کہ وہ اپنی فضائی حدود کھول دے اور وزیراعظم نریندر مودی کا طیارے اپنی فضائی حدود سے گزر کر کرغیزستان جانے کی اجازت دے۔
بھارتی خبر رساں ایجنسی پریس ٹرسٹ انڈیا (پی ٹی آئی) کو تصدیق کی کہ پاکستانی حکومت نے بھارتی حکومت کو وزیراعظم نریندر مودی کا طیارہ اپنی فضائی حدود سے گزرنے کی اجازت دینے کا فیصلہ کرلیا۔ضابطے کی کارروائی مکمل ہونے کے بعد بھارتی حکومت کو اس فیصلے کے بارے میں آگاہ بھی کیا گیا تھا تاہم اب بھارت نے ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اجازت ملنے کے باوجود بھی پاکستانی فضائی حدود استعمال نہ کرنے کا فیصلہ کیا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں