جانور بھی محفوظ نہ رہے، کتے کو اغوا کر کے جنسی زیادتی

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں خواتین کے خلاف جنسی جرائم پوری دنیا میں سب سے زیادہ ہوتے ہیں تاہم اب وہاں خواتین تو ایک طرف رہیں، اب وہاں کتے بھی محفوظ نہیں رہے، جہاں تین شیطان صفت درندوں نے ہمسائے کی کتیا کو اغواءکرکے اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ انسانیت سوز واقعہ بھارتی شہر آگرہ میں پیش آیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ملزمان کے نام دنیش کمار، ستیش اور اشوک ہیں جنہوں نے شہر کے جلیسر روڈ سے کتیا کواس کی مالکن کے گھر سے اغواءکیا اور ویران علاقے میں لیجا کر تینوں ہی اس کے ساتھ منہ کالا کرتے رہے۔ کتیا ایک خاتون سنتوشی دیوی کی ملکیت تھی، جس کا کہنا ہے کہ ملزمان اس کے ہمسائے میں کرائے کے گھر میں رہتے ہیں۔سنتوشی دیوی نے بتایا کہ ملزمان نے کتیا کو کھانے کی چیز کا لالچ دے کر گھر سے باہر آنے پر مجبور کیا اور وہاں سے اسے اٹھا کر لے گئے۔ رپورٹ کے مطابق ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ بھارت میں کتیا کے ساتھ زیادتی کا یہ پہلا واقعہ نہیں ہے۔ اس سے پہلے بھی ایسے درجنوں واقعات پیش آ چکے ہیں۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں