لاہور: پولیس ہاتھوں منشا بم لٹ گیا ،، کاروائی کا اعلان بیش قیمت پلاٹوں کی 27فائلیںایس پی کے قبضہ سے کیوں نکلی ؟

لاہور(رپورٹ:اسد مرزا )لاہور پولیس کے ایماندار پولیس افسران نے قبضہ مافیا منشا بم کی گرفتاری کے دوران اسکے گھروں کی تلاشی کے دوران لوٹ مار کی اور ایک معروف ہاﺅسنگ سوسائٹی کی 27اوپن لیٹر کی فائلیں زیورات اور دیگر سامان بھی لوٹ لیا ۔ ایک پولیس انسپکٹر کی شکایت پر آئی جی پنجاب نے اس معاملے کی انکوائری کروائی تو الزامات ثابت ہونے پر ایس پی معاذ ظفر سے کڑورور روپے مالیت کے پلاٹوں کی 27فائلیں واپس انوسٹی گیشن پولیس کے حوالے کروادیں ۔

خفیہ ایجنسی نے بھی اپنی انکوائری رپورٹ میں ایس پی معاذ ظفر کو ذمہ دار قرار دیکر رپورٹ آئی جی پنجاب کو بھجوا دی ۔ لاہور میں قبضہ مافیا کے منشا بم نے رہائی کے بعد اب پولیس افسران کے گھر لوٹنے کے الزام میں قانونی کارروائی کے لئے وکلاءسے مشاورت شروع کر دی ہے ۔ بتایاگیاہے کہ سپریم کورٹ کے چیف جسٹس مسٹر جسٹس ثاقب نثار نے قبضہ مافیا منشا بم کی گرفتاری کا حکم دیا تو لاہور پولیس کی ٹیمیں 10روز منشا بم کو گرفتار کر نے میں ناکام رہی تب منشا بم نے عدالت اعظمی اسلام آبا د میں جا کرخود پیش ہو گیاتب انوسٹی گیشن انچار ج گرین ٹاﺅن وجیہ الحسن نے منشا بم کو عدالت کے باہر سے گرفتار کر کے لاہور لایا۔بعدازاں ایس پی صدر معاذ ظفر نے انوسٹی گیشن انچار ج گرین ٹاﺅن وجیہ الحسن کو حکم دیا کہ وہ منشا بم کو لیکر جوہر ٹاﺅن پولیس اسٹیشن پہنچیں جس پر اس نے انکار کر دیا کہ انوسٹی ونگ کے افسران حکم دینگے تب وہ ملزم کو لیکر آئینگے ۔

بعدازاں انوسٹی گیشن ونگ کے افسران کے حکم پر ملزم کو لیکر جوہر ٹاﺅن پنچا جہاں ایس پی معاذ ظفر کی قیادت میں ڈی ایس پی ٹاﺅن شپ حافظ سعید ، اور آپریشن ونگ کے ایس ایچ اوز نے منشا بم کو لیکر اسکے گھر پی آئی اے میں پرائیویٹ گاڑیوں پر چھاپہ مارا جہاں گھر سے پلاٹوں کی فائلیں ، زیورات ، اسلحہ اور بھاری رقوم لاہے کی الماریاں کاٹ کر قبضہ میں لی گئیں ۔ بتایا گیاہے کہ ریکوری کے سامان سے 27پلاٹوں کی اوپن فائلیں غائب تھی اس نے افسران سے دریافت کیا تو اسے ڈانٹ دیا گیا تب اس نے ایس ایس پی انوسٹی گیشن کو جا کر صورتحال سے آگاہ کیا کہ ملزم اس کی حراست میں ہے اسطرح فائلیں قانونی طور پر اس کے قبضہ میں ہونی چاہیے کیونکہ عدالت اور افسران کو وہ ہی جوابدہ ہو گا ۔

ذرائع نے بتایا کہ اس معاملے پر پیش رفت نہ ہونے پر انسپکٹر نے آئی جی پنجاب سے بھی شکایت کی جس پر خفیہ ایجنسی سے بھی انکوائری کرائی گئی اس دوران ایس ایس پی انوسٹی گیشن نے ایس پی کو بلا کر 27فائلیں منگوا لیں جو تفتیش انسپکٹر کے حوالے کر دی گئیں ۔ ایس پی معاذ ظفر نے رابطہ کرنے پر کہا کہ انسپکٹر جھوٹ بول رہا ہے چھاپہ مار ٹیم کی سپر وژن ڈی ایس پی ٹاﺅن شپ کر رہے تھے منشا بم کے قبضہ سے ملنے والی فائلوں و دیگر کا ریکارڈ اور مفصل رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش کی گئی تھی ۔اس حوالے سے مذید اہم انکشافات آئندہ رپورٹ میں کئے جائینگے

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں