حکومت پر دباؤ! حسین نواز کی واپسی کا امکان

لاہور(رپورٹ:اسد مرزا)مسلم لیگ ن کے تھینک ٹینکس نے حکومت پر دباﺅ بڑھانے کے لئے سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کے صاحبزادے حسین نواز کو پاکستان آنے کا مشورہ دیا ہے تاکہ ن لیگی قیادت کے خلاف حکومتی سطح پر ہونے والے مبینہ پراپیگنڈا کے اصل محرکات کو منظر عام پر لایا جاسکے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حسین نواز کی ستمبر میں وطن واپسی کے حوالے سے خاندان کے ارکان میں مشاورت جاری ہے ۔ذرائع نے بتایا کہ ن لیگی قیادت کو کسی بھی حلقے سے کوئی ریلیف نہ ملنے کی وجہ سے مایوسی کے سائے مذید گہرے ہو گئے ہیں ۔اس موقع پر ن لیگ کی تھنک ٹینکس نے مشورہ دیا ہے کہ حسین نواز کو وطن واپس آنا چاہیے تا کہ حکومت پر ایک پریشر قائم ہو، حسین نواز ستمبر میں پاکستان آمد سے قبل لندن میں پریس کانفرنس میں انٹرنیشنل میڈیا کے سامنے حقائق اور ملنے والے نئے ثبوت رکھیں کہ انہوں نے کوئی کرپشن نہیں کی بلکہ دادا سے ملنے والی پراپرٹی،کاروبار کی وجہ سے وہ آج اس مقام پر ہیں جس کے بعد پاکستان کی عوام کے پاس آکر اپنا کیس لڑیں ۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ن لیگ کی قیادت اور شریف فیملی کے ارکان میں اس تجویز بارے تیزی سے مشاورت جا ری ہے ۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں