بھارتی وزیراعظم نے عمران خان سے’ گلہ‘ کر دیا سب زیادہ دکھ مجھے کس بات پر ہوا؟ مودی نے خود ہی بتا دیا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) :امریکی صدر اور بھارتی وزیراعظم کے مابین ہونے والے ٹیلی فونک رابطے کے بارے میں مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں صحافی عمر قریشی نے کہا کہ بھارتی میڈیا کا دعویٰ ہے کہ امریکی صدر سے ٹیلی فونک گفتگو کے دوران بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے عمران خان سے متعلق گلہ کیا اور کہا کہ عمران خان کو مجھے فاشسٹ ، نسل پرست جیسے ناموں سے نہیں پکارنا چاہئیے کیونکہ یہ خطے کے امن و استحکام کے لیے مناسب نہیں ہے۔

انہوں نے بھارتی وزیراعظم کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اگر عمران خان کا یہ سب کہنا خطے کے امن و استحکام کے لیے ٹھیک نہیں ہے تو کیا مقبوضہ کشمیر سے متعلق آرٹیکل 370 کا خاتمہ خطے کے امن و استحکام کے لیے تھا ؟

خیال رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کے لیے ایک مرتبہ پھر سے متحرک ہوگئے ہیں۔
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی اور پاکستانی وزیراعظم عمران خان سے ٹیلی فونک رابطہ کیا۔ امریکی صدر نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی پر کشیدگی کم کرنے پر زور دیا جس کے بعد انہوں نے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان سے ٹیلی فونک رابطہ کر کے بھارتی وزیراعظم سے ہونے والی بات چیت سے آگاہ کیا ۔ وزیراعظم عمران خان نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو وادی کی تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر میں کرفیو فوری ختم کروایا جائے اور انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں اور یو این مبصر مشن بھجوائے جائیں تاکہ وادی میں اصل صورتحال کو دنیا کے سامنے لایا جا سکے۔
انہوں نے کشمیر کے معاملے پر کردار ادا کرنے پر امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ کا شکریہ بھی ادا کیا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں