محمد عامر کے بعد ایک اور پاکستانی فاسٹ باولر نے طویل دورانیے کی کرکٹ سے متعلق اہم فیصلہ کر لیا، جان کر آپ بھی حیران ہونگے

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے اعلان کیا ہے کہ فاسٹ بولر وہاب ریاض نے قائداعظم ٹرافی سے دستبردار ہو کر طویل دورانیے کی کرکٹ سے غیرمعینہ مدت تک آرام کا فیصلہ کیا ہے۔

وہاب ریاض کی عمر 34 سال ہے اور پی سی بی کی یہ منتطق سمجھ سے بالاتر ہے کہ انہیں غیر معینہ مدت تک آرام دیا گیا ہے اور وہ کب پانچ روزہ کرکٹ میں شریک ہوں گے۔
وہاب ریاض کا کہنا ہے کہ سپورٹ اور رہنمائی پر بورڈ کا مشکور ہوں، میں نے یہ فیصلہ سوچ سمجھ کر اور اپنے اہل خانہ سے مشورے کے بعد کیا ہے۔

وہاب ریاض نے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کی خواہش ہے کہ میں طویل دورانیے کی کرکٹ جاری رکھوں مگر میں نے آج بورڈ کو اپنے فیصلے سے آگاہ کردیا ہے۔

وہاب ریاض نے کہا کہ میری بات سمجھنے پر پی سی بی کا مشکور ہوں، میں نے فرسٹ کلاس کرکٹ سے علیحدگی اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے، یہ فیصلہ میں نے اپنی گذشتہ کارکردگی کو مدنظر رکھتے ہوئے کیا۔
وہاب ریاض نے کہا کہ طویل دورانیے کی کرکٹ سے علیحدگی کے دوران وہ محدود فارمیٹ کی کرکٹ میں شرکت کرتے رہیں گے، ٹی ٹوئنٹی اور ایک روزہ کرکٹ کھیلنے کے دوران انہیں طویل دورانیے کی کرکٹ کیلئے اپنی فٹنس کو جانچنے کا موقع ملے گا۔

انہوں نے کہا کہ جب خود کو طویل دورانیے کی کرکٹ کھیلنے کا اہل سمجھوں گا اس فارمیٹ کیلئے ایک بار پھر اپنی دستیابی ظاہر کردوں گا۔

اس اعلان کے بعد اب وہاب ریاض قائد اعظم ٹرافی میں جنوبی پنجاب کی نمائندگی نہیں کریں گے اس لیے جمعرات کو وہاب ریاض نے قائد اعظم ٹرافی سے قبل ٹریننگ سیشن میں بھی شرکت سے گریز کیا۔

وہاب ریاض سے قبل محمد عامر بھی ٹیسٹ کرکٹ چھوڑنے کا اعلان کر چکے ہیں۔ وہاب ریاض کا پی سی بی سے سینٹرل کنٹریکٹ ہے۔ وہاب ریاض نے ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اصولی فیصلہ کرلیا ہے اور وہ وائٹ بال کرکٹ کھیل کر اپنے کیریئر کو طول دینا چاہتے ہیں۔

 

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں