ٹاپ 20بدمعاش کی فہرستوں میں ہیرا پھیری۔مہم ناکام، پنجاب کے بڑے بدمعاشوں کو چھوڑ کر بونوں کے خلاف کارروائیاں

لاہور(رپورٹ:اسد مرزا) پنجاب پولیس نے تمام اضلاع کے ٹاپ 20 بدمعاشوں کی لسٹوں میں ہیرا پھیری اورانکی گرفتاری کے بعد انکی ضمانتیں کروالے اپنی کارروائی پوری کر لی ۔آئی جی پنجاب نے تمام آر پی اوز اورڈی پی اوزسے پنجاب بھر میں ٹاپ 20بدمعاشوں کی فراہم کی گئی فہرستوں اور اس پراب ایکشن کے بارے رپورٹ طلب کر لی ہے ۔ذرائع کے مطابق آئی جی پنجاب نے صوبے بھر میں بدمعاشوں کی کمر توڑنے کے لئے دو ماہ قبل پنجاب بھر کے آر پی اوز اورڈی پی اوزکو ٹاپ 20بدمعاشوںکی فہرستیں تیار کر کے بھجوانے انکے خلاف کارروائی سے آگاہ کرنے کی ہدایت کی جبکہ اس اقدام سے حکومت پنجاب کو بھی تفصیلی بریفنگ دی ۔

بتایا گیاہے کہ پنجاب پولیس کے اکثر اضلاع سے ٹاپ 20بدمعاشوں میں بڑے ڈاکوں،قبضہ گروپوں ،منشیات فروشوں اور دیگر سنگین جرائم میں ملوث اصل ملزمان کی بجائے نچلی سطح کے بدمعاشوں کا ریکارڈ مرتب کر کے انہیں ٹاپ20کی فہرستوں میں شاملکر کے حکام کو بھجوا دیں ۔اسی طرح ایسے افراد کو کمزور کیسوں میں گرفتار کر کے جیلوں میں بھجوایا جو ضمانتیں کرواکے واپس آگئے ۔پولیس ذرائع کے مطابق اعلی حکام کی جانب سے اس اہم ترین معاملے پر خاموشی کے باعث تمام اضلاع کی جانب سے ٹاپ20 بدمعاشوں کی فہرستوں کے مطابق تمام بدمعاش گرفتار نہیں ہو سکے۔ پنجاب پولیس کے ترجمان ایڈیشنل آئی جی آپریشن انعام غنی نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ صوبے بھر سے ٹاپ 20 بدمعاشوں کی فہرستوں پر اکثریت کے خلاف کارروائی ہوئی ہے جبکہ باقی بدمعاشوں کے خلاف کارروائی کی جا رہی ہے ۔ پنجاب پولیس نے اس معاملے پر پولیس انٹیلی جنس کی بھی خدمات حاصل کی ہیںتاکہ علم ہو سکے کہ ٹاپ 20بدمعاشوں کے خلاف ہونے والی قانونی کارروائی اور دیگر معاملات کے بارے آگاہ کرینگے ۔ اگر کسی افسر نے غلط بیانی سے یا موثر قانونی کارروائی نہ ہونے کی صورت پر انکے خلاف سخت کارروائی کی جائیگی۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں