جوہری ہتھیاروں کی تیاری، ایرانی سپریم لیڈر کا اہم بیان سامنے آگیا

ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ العظمیٰ علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ اسلام میں ہلاکت خیز جوہری ہتھیاروں کی تیاری اور ان کا استعمال حرام ہے، ایسے ہتھیاروں سے بڑے پیمانے پر معصوم لوگوں کی ہلاکتیں ہوتی ہیں، جس کے اثرات نسلوں تک جاری رہتے ہیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق ایران کے سپریم لیڈر اور روحانی پیشوا آیت اللہ خامنہ ای نے کہا ہے کہ ایران نے کبھی بھی جوہری ہتھیار بنانے یا اس کے استعمال کی خواہش ظاہر نہیں کی، جوہری ہتھیاروں کی تیاری اور استعمال اسلام میں منع ہے۔

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے مزید کہا کہ ایٹمی اسلحہ تیار کرنا اور اس کی ذخیرہ اندوزی اسلام میں حرام ہے، ایسے ہتھیاروں سے بڑے پیمانے پر معصوم لوگوں کی ہلاکتیں ہوتی ہیں جس کے اثرات نسلوں تک جاری رہتے ہیں ایران کے پاس جوہری ٹیکنالوجی تو ہے لیکن اس نے خود کو جوہری ہتھیاروں کی تیاری سے ہمیشہ دور ہی رکھا ہے۔

ایران اور عالمی قوتوں (امریکا، برطانیہ، فرانس، جرمنی، چین اور روس) کے درمیان 2005ء میں جوہری معاہدہ طے پایا تھا، تاہم امریکا نے ایران پر جوہری ہتھیاروں کی تیاری کا الزام عائد کرتے ہوئے 2018ء میں معاہدے سے دست برداری کا اعلان کیا تھا۔اور اس کے بعد ایران کو امریکا کی جانب سے معاشی اور دیگرپابندیوں کا سامنا ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں