مہنگائی کی مکمل چُھٹی ۔۔۔!!! ایک ماہ بعد کیا ہونے جا رہا ہے؟ حکومت نے زبردست اعلان کردیا

صوابی (ویب ڈیسک) اقتدار سنبھالنے کے بعد سے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو درپیش مسائل میں سے ایک بڑا مسلئہ ملک میں روز بروز بڑھتی ہوئی مہنگائی ہے جس کی وجہ سے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو شدید تنقید کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔ اب اس حوالے سے اچھی خبر آئی ہے

اور اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کا کہنا ہے کہ مہنگائی سےایک ماہ میں عوام کو نجات مل جائے گی۔تفصیلات کے مطابق صوابی میں اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان آٹے اور چینی بحران میں ملوث افراد کو نہیں چھوڑیں گے۔اسد قیصر کا کہنا تھا کہ مہنگائی سےایک ماہ میں عوام کو نجات مل جائے گی، حکومت کے ابتدائی فیصلوں کے ثمرات جلد ملنے والے ہیں۔دوسری جانب احساس اثاثہ جات منتقلی پروگرام کی تقریب سے وزیراعظم عمران خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امیر اور غریب میں فاصلے سے کوئی معاشرہ آگے نہیں بڑھ سکتا، ریاست مدینہ دنیا کی پہلی فلاحی ریاست تھی، پاکستان کو فلاحی ریاست بنانے کیلئے کوشاں ہیں۔ انہوں نے کہا ہر ماہ 80 ہزار لوگوں کو بغیر سود قرض دیا جائے گا، ہر سال 50 ہزار سکالر شپس دیئے جائیں گے، ملک بھر میں پناہ گاہ بنانے جا رہے ہیں، اب تک 180 پناہ گاہیں بن چکی ہیں۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کوشش ہے کسی جگہ کوئی سڑک پر نہ سوئے، انصاف کیلئے غریب لوگوں کو وکیل مہیا کریں گے، پنجاب میں 60 لاکھ خاندانوں کو ہیلتھ کارڈز دیں گے، 50 لاکھ خاندانوں کو ہیلتھ کارڈز دے چکے ہیں۔ انہوں نے کہا ہسپتال کی مشینری درآمد کرنے پر ٹیکس ختم کر دیا، سکول اور تعلیمی نظام میں بہتری لانے کی کوشش کر رہے ہیں، چاہتے ہیں ملک میں تعلیم کا ایک نصاب ہو، ملک میں تعلیم کا نظام ٹھیک کرنے لگے ہیں۔عمران خان نے مزید کہا اساتذہ کی غیر حاضری پر سزا اور جزا کا نظام لا رہے ہیں، تھانہ اور کچہری لوگوں کیلئے سب سے بڑا مسئلہ ہے، عام آدمی کو تحفظ نہیں ملتا، نئے آئی جی پنجاب کو سب کے سامنے مبارک دینا چاہتا ہوں، آئی جی کو کہا بڑے بڑے بد معاشوں کو پکڑیں۔دوسری جانب وزیرِ اعظم عمران خان نے مظفر گڑھ میں 250بیڈز پر مشتمل رجب طیب اردگان ہسپتال ٹرسٹ کے نئے بلاک کا افتتاح کر دیا ہے، وزیرِاعظم نے مظفر گڑھ تا ڈیرہ غازی خان دو رویا سڑک کے منصوبے کا بھی افتتاح کر دیا ہے وزیرِ اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار بھی وزیرِ اعظم کے ہمراہ تھے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...