ویکیسن کی تیاری سے قبل ہی کورونا مرض کی نوعیت اور دورانیے میں تبدیلیوں کا انکشاف

کورونا وائرس کی ویکیسن کی تیاری سے قبل ہی مرض کی نوعیت اور دورانیے میں تبدیلیوں کا انکشاف ہوا ہے۔
چینی ماہرین کے مطابق وبا کے مرکزووہان اور دیگر صوبوں میں کورونا کی علامات اور مرض کے دورانیے میں فرق دیکھا گیا۔
ماہرین کے مطابق ایسے لوگ بھی بیماری کے پھیلاؤ کا باعث بنے جن میں کوئی علامات ظاہر ہی نہیں ہوئی تھیں ۔
خیال رہے کہ اس سے قبل کراچی کے ڈاؤ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز نے بھی دعویٰ کیا تھا کہ کورونا وائرس مقامی حالات کے مطابق تبدیل ہورہا ہے۔
کراچی کی ڈاؤ یونیورسٹی میں کورونا وائرس پر وائس چانسلر پروفیسر محمد سعید کی سربراہی میں ریسرچ جاری ہے جس کے مطابق کورونا وائرس میں مقامی حالات کے مطابق جینیاتی تبدیلیاں ہورہی ہیں۔

ڈاؤ یونیورسٹی انتظامیہ کے مطابق ڈاؤ یونیورسٹی کی ریسرچ میں مقامی کورونا وائرس کا تجزیہ کیا گیا جس سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ کورونا وائرس مقامی حالات کے لحاظ سے مختلف شکلیں تبدیل کررہاہے۔
پاکستان کے معروف سائنسدان ڈاکٹر عطاء الرحمان نے بھی کہا تھا کہ پاکستان میں کورونا وائرس پر تحقیق میں اہم پیش رفت ہوئی ہےجس کے مطابق پاکستان میں کورونا وائرس میں پائے جانے والے کروموسومز چین سے مختلف ہیں۔
انہوں نے بتایا کہ پاکستان میں کورونا وائرس میں پائے جانے والے ان کروموسومز کی شدت چینی وائرس میں موجودکرومو سومز جتنی نہیں ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...