چین کے جنرل نے ہمسایہ ملک پر حملے کی د ھمکی دے دی، انتہائی خطرناک صورتحال پیدا ہوگئی

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) تائیوان کی خودمختاری کے معاملے پر چین کی مغربی دنیا سے پہلے بھی ٹھنی رہتی ہے اور اب چین کے جنرل نے ایسی دھمکی دے دی ہے کہ خطے میں کشیدگی کی ایک نئی لہر شروع ہونے کا خطرہ پیدا ہو گیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق چینی جنرل لی ژوشینگ نے گریٹ ہال آف پیپل سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر تائیوان کو آزاد ہونے سے روکنے کے لیے کوئی اور آپشن نہ بچا تو ہم اس پر حملہ کر دیں گے اور طاقت کے بل پر اسے آزاد ہونے سے روک دیں گے۔

جنرل لی ژوشینگ کا کہنا تھا کہ ”چینی مسلح افواج کسی بھی علیحدگی کے منصوبے یا اقدام سے نمٹنے کے لیے ہرممکن حد تک جائیں گی۔ ہم کسی صورت تائیوان کو چین سے الگ کرنے کی کوششیں کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔“ رپورٹ کے مطابق تائیوان کے معاملے پر چینی فوج کی اعلیٰ قیادت کی طرف سے اس طرح کا بیان ایک منفرد واقعہ ہے۔ اس سے قبل کبھی اعلیٰ فوجی قیادت کی طرف سے اس طرح کی بات نہیں کہی گئی۔ لی ژو شینگ کی طرف سے یہ بیان ایسے وقت میں سامنے آ یا ہے جب ایک طرف چین ہانگ کان کی جمہوری طاقتوں کے خلاف بھی کریک ڈاﺅن کر رہا ہے۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...