پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ سمارٹ قبر متعارف ہو گئی ،پاکستانیو ں کے ہوش اڑا دینے والی خبر آگئی

اسلام آباد ( آن لائن )پاکستان تاریخ میں پہلی مرتبہ سمارٹ قبر متعارف کرا دی گئی ،یہ قبر کسی اور کی نہیں بلکہ انجہانی ڈاکٹر رتھ فاو کی ہے جس کے بار کوڈ کو سکین کر کے ان سے متعلق معلومات حاصل کی جا سکتی ہیں ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز کے مطابق پاکستان میں پہلی مرتبہ قبر پر بار کوڈ کے ذریعے اس میں مدفن مردے کی زندگی کے بارے میں معلومات حاصل کرنے والی ٹیکنالوجی متعارف کرائی گئی ہے۔یہ پاکستان میں جزام کا علاج کرنے والی جرمن ڈاکٹر رتھ فاو کی قبر ہے جس پر ’بارکوڈ‘ لگایا گیا ہے۔اس بار کوڈ کو موبائل فون سے سکین کیا جاسکتا ہے، یہ بار کورڈ سکین کرنے کے بعد اس تعارفی مواد کی جانب لے جائے گا جس پر ڈاکٹر روتھ فاوکی زندگی کے بارے میں معلومات فراہم کی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ ڈاکٹر روتھ فاو کو جذام کے مریضوں کا علاج کرنے والی ‘پاکستان کی مدر ٹریسا’ قرار دیا جاتا تھا اوران کو آخری رسومات کی ادائیگی کے بعد گورا قبرستان میں سپردِ خاک کیا گیا تھا۔ڈاکٹر روتھ فاو 1960 میں جرمنی سے پاکستان آئی تھیں، انہیں 1979 میں ہلال امتیاز اور 1989 میں ہلال پاکستان کے اعزازات سے نوازا گیاتھا۔ڈاکٹر روتھ فاو کو 1988 میں پاکستانی شہریت دی گئی، ان کی کوششوں کی بدولت پاکستان کو 1996 میں جذام سے پاک ملک قرار دیا گیاتھا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں