وزیر اعظم کی خفیہ ریکارڈنگ کرنے والے رہنما کے متعلق دھماکہ خیز انکشافات منظر عام پرآگئے

اسلام آبا د (ویب ڈیسک) : سینئر صحافی عارف حمید بھٹی نے وزیراعظم کی خفیہ ریکارڈنگ کرنے والے رہنما سے متعلق بتا دیا۔سینئر صحافی عارف حمید بھٹی نے انکشاف کیا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف کے ایک رہنما نے وزیراعظم عمران خان کی خفیہ ریکارڈنگ کی ہے جس میں انہوں نے چند تلخ باتیں کی ہیں۔انہوں نے عمران خان کی خفیہ ریکارڈنگ کرنے والے رہنما سے متعلق اشارہ دیتے ہوئے بتایا ہے کہ دونوں کے درمیان عمروں کا خاصہ فرق ہے۔

عمران خان مذکورہ رہنما کو اپنا بہت قریبی ساتھی سمجھتے ہیں۔وہ اپنے عزیز کو پنجاب میں پانچ وزارتیں دلوانے چاہتے تھے۔مذکورہ رہنما کو وزیراعظم کے گھر تک بھی رسائی حاصل ہے۔انہوں نے عمران خان سے ملاقات کے دوران خفیہ کیمرہ لگایا اور ریکارڈنگ کرلیں۔
اس دوران عمران خان نے کچھ ایسی باتیں کی جو نہیں ہونی چاہیے تھی۔اسی کے بعد مائنس ون فارمولا میں جان پڑی۔

سوشل میڈیا پر صارفین نے اندازہ لگاتے ہوئے کہا ہے کہ عارف حمید بھٹی پاکستان تحریک انصاف کے رہنما زلفی بخاری کے بارے میں بات کر رہے ہیں کیونکہ ان کے اور عمران خان کے مابین بہت دوستی ہے،زلفی بخاری کو عمران خان کے گھر تک بھی رسائی حاصل ہے جبکہ دونوں کے درمیان عمروں کا فرق ہے۔

خیال رہے کہ سینئر صحافی عارف حمید بھٹی نے انکشاف کیا تھاا کہ ایک خفیہ ویڈیو ریکارڈنگ لیک ہونے کے بعد قومی اسمبلی میں مائنس ون فارمولا میں جان آگئی۔
اپنے پروگرام کے دوران انکشاف کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دو ہفتے قبل وزیراعظم عمران خان کے قریبی ساتھی ان سے ملنے گئے تھے۔جہاں انہوں نے عمران خان کی ویڈیو ریکارڈ کرلی اور وہ آگے لیک کر دی، تجزیہ نگار نے بتایا کہ وہ شخص وزیراعظم کے انتہائی قریبی ساتھی ہیں اور وزیراعظم کے گھر بھی ان کا آنا جانا ہے۔ اور وہ شخصیت اپنے عزیزوں کو پنجاب میں پانچ وزارتیں دلوانے کے خواہشمند ہیں، تاہم وزیراعظم سے ملاقات کے دوران اپنے ساتھ ایک خفیہ کیمرہ لگا کر گئے جس کی وزیراعظم کو خبر تک نہ تھی۔

انہوں نے وزیر اعظم کی ایسی کال کو ریکارڈ کی جس میں عمران خان کچھ تلخ جملوں کا تبادلہ کر رہے تھے۔بعد میں ویڈیو کسی کو بھیج کر لیک کر دی، جس کے بعد اپوزیشن کی طرف سے مائنس ون فارمولا کے مطالبے میں جان آگئی ہے۔واضح رہے کہ پاکستان کی سیاست میں ایک بار پھر مائنس ون کی باتیں ہو رہی ہیں۔اپوزیشن کا کہنا ہے کہ وفاقی وزراء کا اپنی حکومت کے رہنے پر بھی اعتماد نہیں رہا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...