پھٹکری بہت سے مسائل کا حل ہے پھٹکری کے 10 زبردست فائدے

پھٹکری کا استعمال انسان تقریباً 2 ہزار سال سے بھی پہلے سے کر رہا ہے اور طب ایوردیک اور طب یونان میں پھٹکری کو اکسیر مانا جاتا ہے اورپھٹکری کی اسٹرجنٹ اور جراثیم کش خوبیوں کی وجہ سے اس سے بہت سی ادویات میں صدیوں سے استعمال کیا جا رہا ہے۔
اس آرٹیکل میں ہم پھٹکری کے 10 ایسے فائدوں کا ذکر کریں گے جنہیں پڑھ کر آپ بھی اس سستی مگر انتہائی کارآمد اور ادویاتی خوبیوں کی حامل دوا سے فائدہ حاصل کرنا چاہیں گے۔

نمبر 1 منہ کی بدبو کے لیے ماوتھ واش

مُنہ سے بدبو آنے کی سب سے بڑی وجہ مُنہ میں بدبو پیدا کرنے والا بیکٹریا ہے جو عام طور پر مُنہ میں بدبو کیساتھ تیزابیت اور دانتوں کو میلا کرنے کا باعث بنتا ہے، پھٹکری کا ماوتھ واش مُنہ میں اس بیکٹریا کو صاف کرنے کے ساتھ ساتھ اس کے بڑھنے کی صلاحیت کو ختم کر دیتا ہے۔

پھٹکری سے ماوتھ واش بنانے کا طریقہ
ایک گلاس پانی کو اُبال کر اس میں ایک چُٹکی نمک ڈال کر اچھی طرح مکس کرلیں پھر اس میں تھوڑا سا پھٹکری کا پاوڈر ڈال کر کسی بلینڈر میں اچھی طرح مکس کر لیں اور بعد میں چھان کر پانی کو ٹھنڈا ہونے دیں پھر اس پانی سے صبح شام کلی کریں اور اس چیز کا دھیان رکھیں کے یہ پانی نگلا نہ جائے۔

نمبر 2 پسینے کی بدبو کے لیے

جسم سے پیسنہ خارج ہونے کے بعد پسینے سے بدبو پیدا ہوتی ہے جسکی وجہ پیسنے میں شامل بیکٹریا کی خوراک ہے جسے کھا کر وہ اپنی افزائش کرتا ہے اور بدبو پیدا کرتا ہے، اس بدبو سے بچنے کے لیے نہانے کے بعد بغلوں وغیرہ میں پھٹکری مل دیں، پھٹکری کی جراثیم کش خوبیاں پسینے میں بیکٹریا پیدا نہیں ہونے دیں گی اور آپ کو بیکٹریل انفیکشن سے بھی بچائیں گی۔

ایسے افراد جنہیں بہت زیادہ پسینہ آتا ہو وہ پھٹکری کے پاوڈر کو نہانے کے پانی میں مکس کر کے اس پانی سے نہا لیں اس سے بھی اُن کی پریشانی حل ہو جائے گی۔

نمبر 3 چہرے کی جُھریوں کے لیے
بہت کم لوگ جانتے ہیں کے پھٹکری میں anti-aging خوبیاں شامل ہیں جو جلد کو نرم اور ملائم بنانے کے ساتھ ساتھ چمکدار بھی بناتی ہیں۔
پانی میں پھٹکری ڈال کر اسے اُبال لیں اور پھر ٹھنڈا ہونے پر اس پانی سے منہ کو دھوئیں یہ چہرے کی جلد کو ٹُون کرنے کے ساتھ ساتھ چہرے پر چمک لے آئے گا اور جھریوں کا خاتمہ کرے گا۔

نمبر 4 بالوں میں جوئیں پڑ جائیں تو

سر کے بالوں میں جُوؤں کا پڑنا دن اور رات کے سکون کو غارت کر دیتا ہے اور پھٹکری جُوؤں کو مارنے کے لیے انتہائی کارآمد سمجھی جاتی ہے۔
پانی میں پھٹکری کا پاوڈر اورتھوڑا سا ٹی ٹری آئل شامل کر کے بالوں کی جڑوں میں لگائیں اور دس منٹ تک اس سے سر میں مساج کریں اور بعد میں سر کو شیمپو سے دھو لیں اس آمیزے کو ہفتے میں کم از کم 2 دفعہ ضرور استعمال کریں۔

نمبر 5 چہرے کے کیل مہاسوں کے لیے

چہرے پر بننے والے کیل مہاسے جلد کی ایک عام بیماری ہے جو خوبصورتی کو نقصان پہنچاتی ہے، ان کیل مہاسوں کے خاتمے کے لیے پھٹکری کا فیس ماسک انتہائی کارآمد چیز ہے۔

2 چائے کی چمچ مُلتانی مٹی 1 چائے کی چمچ پھٹکری کا پاوڈر اور 2 چائے کی چمچ انڈے کی سفیدی لیکر اچھی مکس کر لیں اور اس مکسچر کو کیل مہاسوں پر لگا کر 15 منٹ تک لگا رہنے دیں اور بعد میں ٹھنڈے پانی سے چہرے کو دھو لیں اور اس مکسچر کو ہفتے میں 3 دفعہ استعمال کریں۔

نمبر 6 گدلے پانی کو صاف کرنے کے لیے
پھٹکری گدلے پانی کو صاف کرنے کے لیے بہترین چیز ہے صرف ایک گرام پھٹکری کا پاوڈر ایک لیٹر بوتل میں مٹی والے پانی میں مکس کر کے رکھ دیں پانی کا سارا گند بوتل کے پیندے میں آجائے گا اور اوپر والا پانی پینے کے قابل ہوجائے گا۔

اگر آپ کیمپینگ کے شوقین ہیں اور کسی ایسی جگہ کیمپ لگانے والے ہیں جہاں صاف پانی میسر نہیں ہے یا آپ کے گاؤں میں صاف پانی نہیں ملتا تو یہ ٹوٹکا آپ کے بہت کام آئے گا۔

نمبر 7 پھٹکری بہترین آفٹر شیو ہے
شیو بنانے کے بعد چہرے پر مہنگے آفٹر شیو کی بجائے آپ پھٹکری بھی مل سکتے ہیں اور اگر آپ اسے استعمال کرنا شروع کر دیں گے تو آپ جان جائیں گے کہ پھٹکری سے بہتر کوئی آفٹر شیو نہیں ہے۔

نمبر 8 جلد پر چھوٹے موٹے کٹ لگنے کی صُورت میں
جلد پر اگر کچن وغیرہ میں کام کرتے ہُوئے کٹ لگ گیا ہے اور زخم زیادہ گہرا نہیں ہے تو اس زخم پر پھٹکری کا پاوڈر ڈال دیں یہ جہاں خون کو بہنے سے فوری طور پر روکے گا وہاں زخم پر جراثیم وغیرہ پیدا نہیں ہونے دے گا اور زخم کو جلد بھرنے میں مدد کرے گا۔

نمبر 9 پھٹوں میں درد اور کھلیاں پڑنے کی صُورت میں
تھوڑی سی پھٹکری اور ایک چُٹکی ہلدی لیکر پانی سے اس کی پیسٹ بنا لیں اور اور درد والے حصے پر لگا کر خُشک ہونے تک لگا رہنے دیں، پھٹکری میں خون کو پتلا کرنے کی صلاحیت ہوتی ہے اور ہلدی ایک نیچرل اینٹی سیپٹیک ہے اور ان دونوں کا مکسچر آپکے پھٹوں کی درد کو ختم کرنے کا باعث بنے گا۔

نمبر 10پاؤں کی ایڑھی پھٹ جائے تو

پھٹکری کو کسی برتن میں کھلا لیں یعنی آگ پر پکا لیں جب یہ کھل جائے تو ٹھنڈا کرکے اسے پیس لیں اور اس میں گری کا تیل شامل کر کے پاؤں کی ایڑھی پر لگا دیں اس جادوئی فائدہ حاصل ہوگا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...