نوجوان شخص نے اولاد کی خواہش میں اپنی بیوی کو جعلی عامل سے زیادتی کا نشانہ بنوایا اور وہ خود وہاں بیٹھا کیا کرتا رہا؟ شرمناک خبر آ گئی

فیصل آباد (ویب ڈیسک )”قیامت کی نشانیاں“ اولاد کےلئے شوہر نے بیوی جعلی عامل کے سپرد کر دی، فیصل آباد کے نواحی تھانہ ستیانہ کے علاقہ میں ”جعلی پیر“ نے شوہر کی موجودگی میں اس کی بیوی کو زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ خاوند نے اپنی بیوی کو باندھ اور منہ پر کپڑا رکھ کر اپنے سامنے جعلی عامل سے زیادتی کروائی جبکہ سی پی او فیصل آباد کا واقعہ کاسخت نوٹس، مقدمہ درج کر لیا گیا۔خاتون کا شوہر اور جعلی پیر گرفتار۔

روزنامہ خبریں کے مطابق ستیانہ بنگلہ چک نمبر 33گ ب کا رہائشی قاصد علی اپنے گھریلو حالات سدھارنے دم درود اور دعا کروانے کےلئے جعلی پیر لیاقت علی کے پاس 39گ ب لے گیا اور قاصد نے اپنی بیوی زنیرہ پروین کو کہا کہ اولاد پیدا ہو جائے گی اور ہمارے سارے کام سیدھے ہو جائیں گے۔ پیر کے حکم پر عمل کرو، اس کے انکار کرنے پر شوہر نے اپنی بیوی کے دونوں ہاتھ باندھ دیئے اور منہ کے اوپر کپڑا رکھ دیا اور جعلی عامل سے اپنے سامنے اپنی بیوی سے زیادتی کروا ڈالی اور خود اپنی بیوی کی بے بسی کا تماشہ دیکھتا رہا۔

واقع کا علم ہونے پر سی پی او اشفاق احمد خان نے سخت نوٹس لیتے ہوئے ستیانہ پولیس کو مقدمہ درج اور خاتون کے شوہر سمیت جعلی عامل کو فوری گرفتار کرنے کے احکامات دیئے۔ جن پر عملدرآمد کرتے پولیس نے مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کرتے ہوئے خاتون کے شوہر قاصداور جعلی پیر لیاقت کو گرفتار کر کے حوالات میں بند کر دیا اور تفتیش شروع کر دی ہے ۔

بتایا گیا ہے کہ ضلع ساہیوال کے رہائشی زمیندار عبدالغفور کی بیٹی زنیرہ پروین کو عرصہ آٹھ سال قبل قاصد علی سے شادی ہوئی تھی جس کے بطن سے کوئی اولاد پیدا نہ ہوئی تو اولاد پیدا ہونے کےلئے خاوند نے اپنی بیوی کو جعلی عامل کے حوالے کر دیا جس نے اس سے اپنا منہ کالا کیا۔

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں