- Advertisement -

پرویز الہیٰ کی چوہدری شجاعت سے تعلقات خراب ہونے یا علیحدگی کی سختی سے تردید

- Advertisement -

اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الہیٰ نے چوہدری شجاعت حسین سے تعلقات خراب ہونے یا علیحدگی کی سختی سے تردید کی ہے۔ پرویز الہیٰ نے کہا کہ ہمیشہ چوہدری شجاعت حسین کیلئے دعاگو ہوں، ہمارے درمیان افواہیں پھیلانے والے ناکام و نامراد رہیں گے۔
چوہدری برادران اور مونس الہیٰ سمیت دیگر ق لیگ کے قائدین نے نماز عید ایک ساتھ ادا کی اور ایک دوسرے کے ساتھ بغل گیر ہوئے۔
نماز کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پرویز الہیٰ نے کہا کہ ہمیشہ چوہدری شجاعت حسین کیلئے دعاگو ہوں، ہمارے درمیان افواہیں پھیلانے والے ناکام و نامراد رہیں گے۔
انہوں نے کہا کہ چودھری شجاعت حسین سے احترام اور محبت کا جو تعلق ہے انشاء اللہ مرتے دم تک قائم رہے گا اور ہمارے درمیان دراڑ دیکھنے والے ہمیشہ ایسے ہی منہ تکتے رہیں گے۔
پرویز الہیٰ کا کہنا تھا کہ شریف برادران نے کبھی عدالتوں کے فیصلوں کا احترام نہیں کیا، سپریم کورٹ پنجاب حکومت کی جانب سے ضمنی انتخابات والے حلقوں میں ترقیاتی کاموں اور ضابطہ اخلاق کی کھلم کھلا خلاف ورزی کا نوٹس لے۔
انہوں نے کہا کہ پنجاب کے ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی کے ورکرز اور امیدواروں کو اپنے ووٹ پر پہرہ دینا ہوگا کیونکہ شریف برادران ہمیشہ انتخابات میں دھونس، دھاندلی اور حکومتی مشینری کو مخالفین کے خلاف استعمال کر کے جیتے رہے ہیں۔
پرویز الہیٰ نے کہا کہ شریفوں کے اس قوم کو غلام بنانے کے خواب ضمنی انتخابات میں چکنا چور ہوجائیں گے اور ضمنی انتخابات میں انشاء اللہ پی ٹی آئی بھاری اکثریت سے جیتے گی، سیاسی وفاداریاں بدلنے والوں کو الیکشن میں شکست فاش ہوگی۔
اُن کا کہنا تھا کہ ’ضمنی انتخابات کے ہر حلقے کا سروے لوٹوں کے خلاف ہے، پنجاب کے عوام ضمنی انتخابات میں ان حکمرانوں کے خلاف فیصلہ سنائیں گے،”تجربہ کاروں“ کی نالائقیاں ملکی معیشت کو تباہی کے دہانے پر لے آئی ہیں۔
چوہدری پرویز الہیٰ نے پنجاب کے عوام سے اپیل کی کہ وہ 17 جولائی کو بلے کو ووٹ دے کر نااہل حکمرانوں سے ہمیشہ کے لیے نجات حاصل کریں۔