جس جگہ پر آج منگلا ڈیم موجود ہے وہاں سالوں قبل کیا انوکھا واقعہ پیش آیا تھا ؟

لاہور (ویب ڈیسک) جس مقام پر اب منگلا ڈیم واقع ھے وہاں پر پھلے میرپور کا پرانا شھر آباد تھا بہت پہلے جنگ کے دوران اس شھر کا بیشتر حصه ملبے کا ڈھیر بنا ھوا تھا ایک روز میں ایک مقامی افسر کو اپنی جیپ میں بٹھائے اسکے گردونواح میں گھوم رھا تھا راستے میں

ایک مفلوک الحال بوڑھا اور اسکی بیوی اک گدھے کو ھانکتے ھوۓ سڑک پر آھسته آھسته چل رھے تھے دونوں کے کپڑے میلے کچیلے اور پھٹے یرانے تھے دونوں کے جوتے بھی ٹوٹے پھوٹے تھے انھوں نے اشارے سے ھماری جیپ کو روک کر “دریافت کیا بیت المال کس طرف ھے ” بیت المال کس طرف ھے أزادکشمیر میں خزانے کو بیت المال ہی کہا جاتا ھے” میں نے پوچھا” بیت المال میں تمھارا کیا کام!”?بوڑھے نے سادگی سے جواب دیا ” میں نے اپنی بیوی کے ساتھ مل کر میرپور شھر کے ملبے کو کرید کرید کر سونے اور چاندی کے ذیورات کی دو بوریاں جمع کی ھیں اب انھیں اس کھوتی پر لاد کر ھم بیت المال میں جمع کروانے جا رھے ھیں”ھم نے انکا گدھا ایک پولیس کانسٹیبل کی حفاظت میں چھوڑا اور بوریوں کو جیب میں رکھ کر دونوں کو اپنے ساتھ بٹھا لیا تاکه انھیں بیت المال لے جائیں۔۔آج بھی جب وه نحیف و نزار اور مفلوک الحال جوڑا مجھے یاد آتا ھے تو میرا سر شرمندگی اور ندامت سے جھک جاتا ھے که جیپ کے اندر میں ان دونوں کے برابر کیوں بیٹھا رھا مجھے چاھیے تھا که میں انکے گرد ألود پاوں اپنی آنکھوں اور سر پر رکھ کر بیٹھوں ..ایسے پاکیزه سیرت لوگ پھر کہاں ملیں گے ؟ ۔۔”اب انھیں ڈھونڈ چراغ رخ ذیبا لیکر۔۔۔۔ ”

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
تبصرے
Loading...